Poetry / Sad

Muzammil Shahzad

کہتے ہیں جب گھر میں اچانک
ایسی آگ بھڑک اٹھے
جو چشمِ زدن میں
ہر یک شے کو اپنی لپیٹ میں لے لے،
آگ بجھانا مشکل ہو اور
گھر کا اثاثہ اس سے بچانا ناممکن ۔۔۔تو
ایک ہی رستہ رہ جاتا ہے
جو بچتا ہے وہی بچائو!
گھر کی سب سے قیمتی چیز ہاتھ میں لو اور
اس سے دور نکل جائو

میرے دل میں بھی ایسی ہی آگ لگی تھی
میں نے جلدی جلدی آنکھ میں تیرے بجھتے خواب سمیٹے
تیری یاد کے ٹکڑے چن کر دھیان میں رکھے
اور اس آگ میں دل کو جلتا چھوڑ کے دور نکل آیا ہوں
میں نے ٹھیک کیا ہے نا,

Advertisement
· 2 Like · Jul 19, 2016 at 18:07
Category: sad
 

Latest Posts in poetry

Cute Bride Pose
Posted by Urooj Zahed
Posted on : Apr 03, 2019

Random Post

New Pages at Social Wall

New Profiles at Social Wall

Connect with us


Facebook

Twitter

Google +

RSS